Love shayari images sad shayari photo status

Spread the love

Meri Diwaangi ki koi Hadd Nahin,
Teri Suraat ke Siva Kuchh Yaad Nahin,
Mein hu Phool Tere Gulshaan Ka,

Tere Siva Mujh pe Kisi ka HAQQ Nahin..

Khushi se dil ko aabad karna…
Aur gham ko dil se azad karna,
Hamari bus itni gujarish hai ke hame bhi
Din me ek baar YAAD karna…

Dil Ne Jise zindagi bhar Chaha Hai
Aaj Karunga Mai Unse Ikrar,
Jiski Sadiyo Se Tammanah Ki Hai,
Unse Karunga Mere Pyar Ka Izhaar..!!

Ajeeb Si Kashish Hai Aap Me
Ki Hum Aap Ke Khayalon Me Khoye Rehte Hai
Ye Soch Kar Ke Aap Khawabo Me Aao Gay
Hum Din Me Bhi Soya Karte Hai

Love shayari images sad shayari photo status

ہم ہی میں تھی نہ کوئی بات یاد نہ تم کو آ سکے
تم نے ہمیں بھلا دیا ہم نہ تمہیں بھلا سکے

تم ہی نہ سن سکے اگر قصۂ غم سنے گا کون
کس کی زباں کھلے گی پھر ہم نہ اگر سنا سکے

ہوش میں آ چکے تھے ہم جوش میں آ چکے تھے ہم
بزم کا رنگ دیکھ کر سر نہ مگر اٹھا سکے

رونق بزم بن گئے لب پہ حکایتیں رہیں
دل میں شکایتیں رہیں لب نہ مگر ہلا سکے

شوق وصال ہے یہاں لب پہ سوال ہے یہاں
کس کی مجال ہے یہاں ہم سے نظر ملا سکے

ایسا ہو کوئی نامہ بر بات پہ کان دھر سکے
سن کے یقین کر سکے جا کے انہیں سنا سکے

عجز سے اور بڑھ گئی برہمی مزاج دوست
اب وہ کرے علاج دوست جس کی سمجھ میں آ سکے

اہل زباں تو ہیں بہت کوئی نہیں ہے اہل دل
کون تری طرح حفیظ درد کے گیت گا سکے

حفیظ جالندھری

https://shayari-urdu-hindi.com/rahat-indori-shayari-best-sad-ghazals-poetry/

Love shayari images sad shayari photo status

شہر کا شہر اگر آئے بھی سمجھانے کو
اس سے کیا فرق پڑے گا ترے دیوانے کو

کیا کوئی کھیل ہے بے نام و نشاں ہو جانا
ویسے تو شمع بھی تیار ہے جل جانے کو

وہ عجب شخص تھا کل جس سے ملاقات ہوئی
میں ملا ہوں کسی جانے ہوئے ان جانے کو

ایک لمحہ بھی تو بے کار نہیں کٹ سکتا
ایک گتھی جو ملی ہے مجھے سلجھانے کو

یہ الگ بات کہ اک بوند مقدر میں نہ تھی
سر پہ سو بار گھٹا چھائی رہی چھانے کو

شام ہونے کو ہے جلنے کو ہے شمع محفل
سانس لینے کی بھی فرصت نہیں پروانے کو

شہزاد احمد

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *